• Help
  • General Knowledge
  • Our Chat
  • Creators
  • Characters
  • Introduction
  • Home
  • Email Subscription
  • BookMark
  • Disclaimer

تازہ ترین کہانیاں

2012-03-30

پنکی - عقل کا کھیل


پنکی نے ہاتھی خریدا اور ہاتھی نے برجو صاحب کے باغ کے کیلے کھا لیے۔ کیلے کے پیسے کون دے گا اور ہاتھی کی غذا کا مسئلہ کیسے حل ہوگا؟ دیکھئے ذرا برجو صاحب کی عقل کا کمال ۔۔۔


ٹرانسکرپٹ || ترجمہ : مکرم نیاز
بیٹی ، یہ پیسے کیسے؟ اور کہاں جا رہی ہو؟
میرے پاس 20 روپے ہیں ، مجھے ایک کھلونے خریدنا ہے
یہ پیسے مجھے دو اور ایک جیتا جاگتا کھلونا مجھ سے لے لو
بالکل ٹھیک! لائیے دیجئے
لو یہ جمبو اب تمہارا ہوا !
اب میں ہاتھی کی سواری کروں گی اور خوب گھوموں گی
اوہ! تم بھوکے لگتے ہو
اے پنکی ! ان کیلوں کے لیے تم کو 50 روپے دینا پڑیں گے
برجو صاحب! میں نے یہ ہاتھی ہی 20 روپے میں لیا۔ اب 50 کہاں سے دوں؟
بہتر ہے آپ خود رکھیں یہ ہاتھی۔ میں چلی
برجو صاحب! آپ؟ یہ کیا؟
ہاتھی کی غذا کے لیے میں یہ طریقہ ڈھونڈ لیا ہے
اور یہ سب دماغ کا کھیل ہے!!

0 تبصرے :

Post a Comment